متاثرہ اضلاع میں مڈل کلاسز تک تعلیمی ادارے بند، بورڈ‌کلاسز جاری

0
108

اسلام آباد(ایس این این) پورے ملک میں نرسری تا ہشتم تعلیمی ادارے بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود نے این سی او سی کے اجلاس کے بعد پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔پنجاب کے 13 اضلاع جبکہ کے پی کے ، پنجاب اور سندھ میں متاثرہ اضلاع میں کلاس اول تا جماعت ہشتم تعلیمی سرگرمیاں 28 اپریل تک بند کر دی گئی ہیں۔ نہم تا سیکنڈ ائیر اور یونیورسٹیاں بھی صرف متاثرہ اضلاع میں بند کی جائیں گی۔اس ضمن میں این سی او سی کی میٹنگ 28 اپریل کو ہو گی جس میں مزید فیصلے کیے جائیں گے۔پورے ملک میں 40 لاکھ امتحان دینے والے بچوں کے لیے 19 اپریل کو تمام کالجز کھول دیے جائیں گے. یونیورسٹیز میں داخلوں کی تاریخ میں توسیع کر دی گئی ہے.وفاقی وزیر تعلیم شفقت محمود کی زیر صدرات نیشنل کمانڈ اینڈ کنٹرول سینٹر( این سی او سی) کے تحت صوبائی وزرائے تعلیم کانفرنس ہوئی، کانفرنس میں وفاقی و صوبائی وزرائے تعلیم و صحت نے شرکت کی،کانفرنس میں ملک بھر میں کورونا کی صورتحال کا جائزہ لیا گیا،کانفرنس میں عید کی چھٹیوں کے بعد امتحانات لینے پر اتفاق رائے ہوا، پہلی سے آٹھویں جماعت تک تعلیمی اداروں کو عید تک بند رکھنے جبکہ نہم سے بارہویں جماعت تک کے بچوں کو پچاس فیصد حاضری کے تحت سکول بلوانے کا فیصلہ کیا گیا۔ذرائع کےمطابق کانفرنس میں محکمہ صحت نے کورونا وائرس کے پیش نظر تعلیمی ادارے عید تک بند رکھنے کی تجویز دی تھی، جس کی صوبائی وزیر تعلیم پنجاب مراد راس نے مخالفت کی تھی۔واضح رہے کہ لاہور سمیت ملک بھر میں کورونا وائرس تیزی سے پھیل رہا ہے جس کے باعث کئی پابندیاں دوبارہ نافذ کی گئی ہیں، گزشتہ چوبیس گھنٹوں میں کورونا وائرس سے مزید 42 افراد چل بسے،4 ہزار 323 افراد میں وائرس کی تشخیص ہوگئی، کورونا کے مثبت کیسز کی شرح 9.96 فی صد ہوگئی۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here